NARMI IKHTYAR KARO SAKHTI IKHTYAR MAT KARO

NARMI IKHTYAR KARO SAKHTI IKHTYAR MAT KARO

Ap sallallahu alaihi wasallam ne farmaya

Bila Beshuba Deen Bohot aasan hai aur jo shakhs deen me sakhti ikhtyar karega to deen us par Ghalib ajayega is liye apne amal me isteqamat ikhtyar karo aur jahan tak hosake miyana rawi barto  (aetedal/beech ki raah ikhtyar karo) , khush hojao ( ke is tarz e amal par Allah ke yahan ajr milega) aur Subah, Dopahar, Sham aur kisi Qadar raat me (Ibadat se) madad haasil karo.

(Saheeh Bukhari hadees 39)

Aj kal Bhot se Masael hamari bejaa sakhti aur kam ilmi ki bunyaad par pesh aarahe hain.

عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ، عَنِ النَّبِيِّ صَلَّى اللهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ قَالَ: «إِنَّ الدِّينَ يُسْرٌ، وَلَنْ يُشَادَّ الدِّينَ أَحَدٌ إِلَّا غَلَبَهُ، فَسَدِّدُوا وَقَارِبُوا، وَأَبْشِرُوا، وَاسْتَعِينُوا بِالْغَدْوَةِ وَالرَّوْحَةِ وَشَيْءٍ مِنَ الدُّلْجَةِ»

حضرت ابو ہریرہؓ سے روایت ہے وہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم سے روایت کرتے ہیں کہ آپ ﷺ نے فرمایا

«بلا شبہ دین بہت آسان ہے اور وہ شخص جو دین میں سختی اختیار کرے گا تو دین اس پر غالب آجائے گا( اس لئے) اپنے عمل میں استقامت اختیار کرو اور (جہاں  تک ہوسکے) میانہ روی برتو، خوش ہوجاؤ (کہ اس طرز عمل پر اللہ کے یہاں اجر ملے گا) اور صبح،دوپہر ،شام اور کسی قدر رات میں (عبادت سے) مدد حاصل کرو۔»

(صحیح بخاری حدیث 39)

Advertisements